تصویروں سے بھری چھاتی

تصویروں سے بھری چھاتی

دل خالی ہوجائے
تو وجود شل ہو جاتا ہے
روشنی کی رفتار سے اڑتا آدمی
گر جاتا ہے
لکھنے کی میز
اور تنہائی کے بستر کے بیچ
تین قدم کے بلیک ہول میں

محبت تمہیں اپنے ہزار رنگوں سے
پریشان رکھتی ہے
تم یکجائی کے نشے میں
خود کو پرزہ پرزہ کرتے ہو
اور تمہاری چھاتی بھر جاتی ہے تصویروں سے

تین قدم کے بلیک ہول سے
رنگ نہیں رِستے
خون نہیں رِستا
کورے کینوس اڑتے ہیں خواب گاہ میں

لوگ ان پر کھینچ لیتے ہیں
اپنی قسمت کی لکیریں
تمہارے دل کے سوراخ کی
بولی لگاتے

Image: Lilya Kouhan

Did you enjoy reading this article?
Subscribe to our free weekly E-Magazine which includes best articles of the week published on Laaltain and comes out every Monday.
Hussain Abid

Hussain Abid

Poet and Musician Hussain Abid, was born in Lahore and is currently living in Germany. His poetry collections; "Utri Konjain", "Dhundla'ay din ki Hidat" and Behtay Aks ka Bulawa" have been praised by the general audience and the critics alike. Hussain Abid collaborated with Masood Qamar to produce "Kaghaz pe Bani Dhoop" and "Qehqaha Isnan ne Ejad kia". Abid's musical group "Saranga" is the first ever musical assemble to perform in Urdu and German together.


Related Articles

میں پھر اٹھوں گی

میں تاریخ کے شرمناک گھروندوں سے نکلتی ہوں
اُس ماضی میں سے سفر شروع کرتی ہوں
جس کی جڑیں دُکھ، درد اور تکلیف میں دبی ہوئی ہیں
میں اُچھلتا، ٹھاٹھیں مارتا ہُوا، وسیع و عریض ایک تاریک سمندر ہوں
جو اپنی لہروں میں بہتا جا رہا ہے

The Insane Sufi

Translation of a Pashto poem by Syed Bahauddin Majroh Name of book: Na-ashna Sandari (Stranger's songs) Name of the poem

اجنبی جگہیں

ابرار احمد: دریچے، آنکھیں بن جاتے ہیں
ایک اجنبی باس
الوہی سرشاری سے
ہمارے مساموں میں اتر جانے کو بے چین ہو جاتی ہے