تقریرکرنے والوں کے ہونٹوں پر

تقریرکرنے والوں کے ہونٹوں پر
تقریرکرنے والوں کے ہونٹوں پر
تقریر کرنے والوں کے ہونٹوں پر
ہم اپنی ضرورتوں کی جمع بندی
رکھ دیتے ہیں
اور اس کی جلد پر سرخ کپڑا چڑھا دیتے ہیں
ہر صفحے کو ہم اپنی کھال سے
ساہوکار کے نوکیلے سوے سے پرو کر
ایک تمغے کا کریڈٹ کارڈ ہم
اپنے سینے پر آویزاں کر لیتے ہیں
جس پر سکندراعظم کے ٹوپ کےاندر
ہماراپیپ زدہ چہرہ
یہ خواہش کرتا ہے
اتنے فیتے ہمارے جسم پر آوزاں ہو جائیں
کہ ہماری رگوں میں خون کی جگہ
سلور گولڈ پلاٹیم ویزہ ماسٹر کارڈ پر لکھے ہوئے ہندسے
سیکیورٹی کوڈ کے ساتھ دوڑنے لگیں
جس کی ایکسپیائریشن ڈیٹ
ہمارے پیدا ہونے سے پہلے ہی
ختم ہو چکی ہو

Image: Paweł Kuczyński

Did you enjoy reading this article?
Subscribe to our free weekly E-Magazine which includes best articles of the week published on Laaltain and comes out every Monday.
Mumtaz Hussain

Mumtaz Hussain

Mumtaz Hussain is an artist, film maker and a writer. He has also served as an art director for Calvin Klein, Ralph Lauren and Simon & Schuster. Mumtaz directed 13 episodes of an informative talk show for channel 9 "Ask a Lawyer." His Urdu book of short stories, GOOL AINAK K PECHAY, LAFZON MAIN TASVEERAIN is published. His script The Kind Executioner received finalist award at Hollywood Screenplay Contest Hollywood and first award at Jaipur International film festival. His paintings and films have been shown at numerous museums, universities, art galleries and international film Festivals.


Related Articles

میں نے حیرت کو قتل کیا

میں نے میں نے حیرت کو قتل کیا
اورتحیر کی لاش دریافت ہونے تک میں خود کو محفوظ خیال کر سکتا ہوں
کو قتل کیا
اورتحیر کی لاش دریافت ہونے تک میں خود کو محفوظ خیال کر سکتا ہوں

پھانسی گھاٹ

حسین عابد: وہ آدمی مر چکا ہے
وہ لوگ بھی مر رہے ہیں
لیکن کندھوں پر اٹھائے ان کے بچے
آج بھی گندے نالے میں گر رہے ہیں

بچہ اور بالغ

حسین عابد: ممکن ہے
وہ
تمہارے موٹے بوٹ پہن کر
تمہاری کدال اٹھائے جا چکا ہو