دہشتگردی اور ہماری کہانیاں

کراچی ادبی میلے 2014میں جہاں شاعروں اور ادیبوں نے اَدبی روایات، شاعری اور قصہ کہانیوں پر گفتگو کی وہیں پر بہت سے سماجی مسائل بھی زیرِ بحث آئے۔ میلے میں شریک دانشوروں، ادیبوں اور مشاہیر نے موجودہ سماجی مسائل کا تجزیہ ماضی کی ادبی اور فنی روایات کے تناظر میں کیا۔ لالٹین قارئین کی دلچسپی کے لیے پیش خدمت ہے کراچی ادبی میلے کے دوسرے روز شدت پسندی اور دہشت گردی کےادب پر اثرات بارے جناب آصف فرخی، انتظار حسین اور محترمہ عارفہ سیدہ زہرہ کے مابین جناب آصف فرخی کی بیان کردہ گوتم کہانی "انگلی مالا" کے تناظر میں ہونے والی مکمل گفتگو۔ میزبانی کے فرائض جناب مسعود اشعر نے نبھا ئے۔

Did you enjoy reading this article?
Subscribe to our free weekly E-Magazine which includes best articles of the week published on Laaltain and comes out every Monday.
The Laaltain

The Laaltain

For Open and Progressive Pakistan


Related Articles

مذہب برائے فروخت

رمضان المبارک کے مقدس مہینے کی ہی بات نہیں ہے بلکہ ہمارے ٹی وی چینلز نے ہر مذہبی تہوار کوبے قدر کر دیا ہے۔

سماج کا ننگا دیباچہ

تصنیف حیدر: آپ اس کتاب کا کوئی بھی حصہ پڑھ جائیے، یہ کتاب آپ کو پریشان کرے گی، پریشان اس معاملے میں کہ اتنی اچھی باتیں سمجھنے سے آپ کو کیوں روکا جاتا ہے۔والدین کیوں اپنے بچوں کی پرابلم نہیں سنتے۔سیکس آخر ہے کیا چیز؟

انسانی حقوق اور حریت فکر

ہر انسان انصاف ،امن ،محبت اور خوشحالی کا طلب گار ہے اور ہر فرد نا انصافی ،بدامنی ،نفرت اور غربت کو برا سمجھتا ہے۔