زرعی یونیورسٹی فیصل آباد؛ تحقیق کے بعد آم کی دس بہتر اقسام کی شناخت

زرعی یونیورسٹی فیصل آباد؛ تحقیق کے بعد آم کی دس بہتر اقسام کی شناخت
بہتر پیداوار اور قوت مدافعت کی حامل آم کی دس اقسام زرعی یونیورسٹی فیصل آباد میں جاری تحقیق کے نتیجے میں شناخت کیگئی ہیں جو جلد ہی آم کے کاشتکاروں تک پہنچا دی جائیں گی۔ فیصل آباد زرعی یونیورسٹی میں تحقیق کے دوران پاکستان میں پائی جانے والی 471 اقسام کا جائزہ لیا گیا جس کے بعد بہتر خواص کی حامل دس اقسام کی شناخت کی گئی ہے۔
بہتر پیداوار اور قوت مدافعت کی حامل آم کی دس اقسام زرعی یونیورسٹی فیصل آباد میں جاری تحقیق کے نتیجے میں شناخت کی گئی ہیں جو جلد ہی آم کے کاشتکاروں تک پہنچا دی جائیں گی۔
زرعی یونیورسٹی میں 10 ستمبر کو ہونے والے ایک سیمینار کے دوران یونیورسٹی کے وائس چانسلر ڈاکٹر اقرار احمد نے اس تحقیق کوشرکاء کے سامنے پیش کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں بہتر گودے والی اقسام کشمیر سے لے کر پنجاب کے میدانی علاقوں تک کاشت کی جاتی ہیں۔تحقیق زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے انسٹی ٹیوٹ آف ہارٹی کلچر، پلانٹ پتھالوجی ڈیپارٹمنٹ، سنٹر فار ایگریکلچرل بائیو کیمسٹری ایڈبائیو ٹیکنالوجی اور بہاوالدین زکریا یونیورسٹی کے ہارٹی کلچر سائنسز ڈیپارٹمنٹ کے اشتراک سے کی گئی۔
سیمینار کے دوران یونیورسٹی آف کیلیفورنیا کی ڈاکٹر لوئس فرگوسن نے زرعی یونیورسٹی میں آم کی متنوع اور بہتر خّاص کی حامل کاشت کے چار نئے منصوبوں کے اجراء کا اعلان بھی کیا۔ ڈائریکٹر جنرل ریسرچ پنجاب ڈاکٹر عابد محمود نے اس موقع پر بین الاقوامی معیار کے مطابق منضبط ماحول (Controlled Environment) میں آم کی کاشت کے منصوبے کے آغاز کا بھی اعلان کیا۔ پاکستان میں آم کی چالیس فی صد پیداوارموسمی حالات، بیماریوں اور نامناسب دیکھ بھال کے باعث ضائع ہوجاتی ہے۔

پریس ریلیز
The Laaltain

The Laaltain

For Open and Progressive Pakistan


Related Articles

بہاوالدین زکریا یونیورسٹی؛ داخلوں کے لئے بلا اجازت اشتہاراور طلبہ کے لیے مشکلات

محمد شعیب     بہاوالدین زکریا یونیورسٹی لاہور کیمپس میں مختلف تعلیمی پروگراموں میں داخلے کے لئے ہائرایجوکیشن کمیشن سے

لنڈی کوتل؛ آئی ڈی پیز کی واپسی کے باوجود چھ میں سے پانچ گرلز سکول بند

لنڈی کوتل میں باڑہ کے علاقے کمر خیل میں سرکاری یقین دہانیوں اور اعلانات کے باوجود چھ میں سے پانچ گرلز سکول تاحال بند ہیں۔

فاٹا کے نوجوانوں کے لیے انٹرن شپ پروگرام کا آغاز

وفاق کے زیر انتظام قبائلی علاقوں کے تعلیم یافتہ بے روزگار نوجوانوں کے لیے فاٹا سیکریٹریٹ ایک سالہ انٹرن شپ پروگرام کا آغاز کررہا ہے۔ اس پروگرام کے تحت فاٹا کے تعلیم یافتہ اور بیروزگار نوجوانوں خصوصاً خواتین کو ان کے متعلقہ شعبہ جات میں ایک سال کی انٹرن شپ مہیا کی جائے گی۔