طاہر اسلم گورا کے عشرے

طاہر اسلم گورا کے عشرے


عشرہ: جنگی ترانے مت لگاؤ
ایک دوسرے کے خلاف
جنگی ترانے مت گاؤ
جنگی ترانے گانے بند کر دینے چاہیئں
ایک دن یہ سارے دشمن مر جائیں گے
تمہارے اور ہمارے ہیرو بھی
تمہیں اور ہمیں اُکسانے والے بھی
جنگی ترانے روکنے کی پہل کرنے کی جرات تو کیجئے
سرحدوں پر سپاہی کھڑے کھڑے بوڑھے ہو گئے ہیں
میرے جنرل صاحب کو اپنے جنگی کاروبار کو روکنا ہے
اور آپ کے پردھان منتری کو امن کا اشیر باد دینا ہے

عشرہ: دس سطروں میں بیان
ہم دس سطروں میں اپنا بیان قلمبند کروا سکتے ہیں
وہ اگر ہمیں پکڑنا چاہیں گے تو پکڑ لیں گے
ہم اگر بھاگنا بھی چاہیں تو بھاگ نہیں سکیں گے
ویسے ہم بھاگنا چاہتے بھی نہیں
انہوں نے غداری اور کفر کے فتووں کا ایسا بازار گرم کر رکھا ہے
شہر کا شہر ایک دوسرے کو کافر اور غدار کہتا نہیں تھکتا
ہر کوئی اپنے مخالف کو گولی مارنے سے پہلے کفر اور غداری کی کالک مَلنا چاہتا ہے
ہم اپنے بیان میں ان حقارت آمیز لفظوں کو ڈکشنری سے نکالنے کا مطالبہ کرتے ہیں
ہمارا یہ بیان دس سطروں سے پہلے ختم ہو رہا ہے
کیونکہ لوگوں کا ایک ہجوم ہمیں مارنے کو آرہا ہے

Did you enjoy reading this article?
Subscribe to our free weekly E-Magazine which includes best articles of the week published on Laaltain and comes out every Monday.

Related Articles

عشرہ // بلاعنوان

ادریس بابر: گالیاں آنگن کی دیوار پھلانگ آئی ہیں
دھمکی کے پتھر سے آئینہ گھائل ہے
فتوے کے فائر سے فاختہ قائل ہے

فقہ اور آمریت

ال دہلوی کہتے ہیں " وہی مکتبہ فکر زیادہ مشہور ہوئے جن کے پاس قضا اور افتاء کی طاقت تھی۔ باقی معدوم ہوتے چلے گئے۔ "

عشرہ / سترہ سے سترہ تک

ادریس بابر: ظلم کے زور پہ کھینچی گئی لائن
خلق کے خون سے سینچی گئی لائن
اس خونی ریکھا کی رکھشا
اب تک کس کھاتے میں قرض ہے