لاہور؛ سیمنٹ نوشوں کی تعداد میں اضافہ، مزید فلائی اوورز کی تعمیر کا مطالبہ

لاہور؛ سیمنٹ نوشوں کی تعداد میں اضافہ، مزید فلائی اوورز کی تعمیر کا مطالبہ
یہ خبر خبرستان ٹائمز پر انگریزی میں پڑھنے کے لیے کلک کیجیے۔

لاہور: امریکہ میں قائم نیشنل انسٹی ٹیوٹ آن ڈرگ ابیوز (نیڈا) کے سائنس دانوں نے تصدیق کی ہے پنجاب کے دارالخلافہ لاہور میں سیمنٹ نوشی کے عادی افراد کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے۔ نیڈا کی تحقیق میں شہر کے مختلف علاقوں میں ناکافی اور سست تعمیراتی کام کے خلاف منعقد کی گئی احتجاجی ریلیوں کا جائزہ لیا گیا ہے۔ نیڈا کے تحقیقاتی جائزے میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ لاہور کے شہریوں میں سیمنٹ کا روزانہ استعمال 4 ملی گرام یومیہ سے بڑھ کر 1.68 گرام یومیہ ہو چکا ہے۔

امریکہ میں قائم نیشنل انسٹی ٹیوٹ آن ڈرگ ابیوز (نیڈا) کے سائنس دانوں نے تصدیق کی ہے پنجاب کے دارالخلافہ لاہور میں سیمنٹ نوشی کے عادی افراد کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے۔
نیڈا سے وابستہ محقق البرٹ برائنٹ کا کہنا تھا "سیمنٹ کے استعمال میں یہ اضافہ Concrete intoxication یا سی سی آئی کی واضح علامت ہے"۔ ماہرین نے اس نئے منشیاتی مظہر کو multiple cement intake (ایم سی آئی) کا سب سے بڑا واقعہ قرار دیا ہے۔ البرٹ برائنٹ کا کہنا تھا کہ سیمنٹ سے حظ کشید کرنے کا یہ معاملہ کسی بھی اور مسکن یا نشہ آور شے کے استعمال سے مختلف ہے۔

نیڈا سے تعلق رکھنے والی ماہر جیلینا بیلیچ کے مطابق، "دنیا کی بہترین میٹرو بس سروس کی تعمیر مکمل ہونے اور میٹرو ٹرین کی تعمیر شروع ہو جانے کے بعد سے شہریوں کی جانب سے مزید دلکش سرمئی کنکریٹی ستونوں اور پلوں کا مطالبہ دیکھنے میں آیا ہے"۔

دریائے لکشمی شہر میں جاری ترقیاتی کاموں کے نتیجے میں رونما ہونے والا ایک اور تعمیراتی معجزہ ہے۔ دریا کنارے منعقد ہونے والی حالیہ ریلی میں شریک ایک شہری بہادر ملک کا کہنا تھا،"ہم سب اپنے شہر کو وینس بنتا دیکھ کر مسرور ہیں۔" انہوں نے نشہ دو آتشہ کرنے کے لیے اورنج ٹرین کے ٹریک کے ساتھ ساتھ سلائیڈز لگانے کا بھی مطالبہ کیا۔ بہادر ملک نے قریبی کنکریٹ مکسچر مشین سے چرایا گیا کنکریٹ سونگھتے ہوئے بتایا،"یہ دریا اپنی تہہ میں کئی راز پوشیدہ کیے ہوئے ہے بالک!!!"۔ مظاہرین نے اس موقع پر جیے شہباز قلندر شریف کے نعرے لگاتے ہوئے دھمال بھی ڈالی۔

بیگم پورہ کے قریب ہتھیلی پر سیمنٹ اور ریت ملا کر خالی سگریٹ میں بھرتے ہوئے تنیویر پومی کا کہنا تھا کہ اگرچہ ڈی جی سیمنٹ آسانی سے مل جاتا ہے مگر اصل نشہ عسکری سیمنٹ کا ہی ہے۔
شہریوں نے ملک میں جاری ترقیاتی منصوبوں کو سراہتے ہوئے کلمہ چوک پر ایک اور فلائی اوور بنانے کا مطالبہ کیا۔ یو ای ٹی میں انجینئرنگ پروفیسر نازیہ بھٹی نے کلمہ چوک انڈر پاس کو اپنا پسندیدہ انڈر پاس قرار دیا، "یہی وہ انڈر پاس تھا جس نے مجھے پہلی بار سیمنٹ سونگھنے کی طرف مائل کیا"۔ سیمنٹیوں اور کنکریٹیوں کی ایک بڑی تعداد کو اورنج میٹرو ٹرین کے زیر تعمیر ستونوں کے پاس منڈلاتے دیکھا جا سکتا ہے۔ نوجوانوں کی ایک بڑی تعداد گانجا، چرس اور شراب چھوڑ کر سیمنٹ اور کنکریٹ کا 'تعمیری نشہ' کرنے لگی ہے۔ بیگم پورہ کے قریب ہتھیلی پر سیمنٹ اور ریت ملا کر خالی سگریٹ میں بھرتے ہوئے تنیویر پومی کا کہنا تھا کہ اگرچہ ڈی جی سیمنٹ آسانی سے مل جاتا ہے مگر اصل نشہ عسکری سیمنٹ کا ہی ہے۔

شہریوں نے ماڈل ٹاون اور ڈی ایچ اے کو ایک زیرِ زمین گزرگاہ کے ذریعے ملانے کا بھی مطالبہ کیا۔ گورا قبرستان میں آسیب بن کر منڈلانے والے جمشید جنجوعہ نے بھی دیگر قبرستانوں سے بہتر مابعدالطبعیاتی تعلقات استوار کرنے کے لیے ایک گزرگاہ کی تعمیر کا مطالبہ کیا۔ لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے نوٹس میں شہریوں کی تجاویز پیش کر دی گئی ہیں اور حکام کی جانب سے جلد ایک ماسٹر پلان پیش کیے جانے کا امکان ہے۔

یہ ایک فرضی تحریر ہے۔ اسے محض تفنن طبع کی خاطر شائع کیا گیا ہے، کسی بھی فرد، ادارے یا طبقے کی توہین، دل آزاری یا اس سے متعلق غلط فہمیاں پھیلانا مقصود نہیں۔

Related Articles

پاکستان میں بھارتی مداخلت، 'وار' فلم کی ڈی وی ڈی بطور ثبوت اقوام متحدہ میں جمع کرائی جائے گی۔ سرتاج عزیز

خبرستان ٹائمز: نامہ نگار خبرستان ٹائمز کی تحقیق میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ پاکستان کی جانب سے پیش کی جانے والی فائل میں موجود افراد رمل، لکشمی، میجر مجتبیٰ رضوی، اعجاز خان اور احتشام دراصل آئی ایس پی آر کی معاونت سے تیار ہونے والی بلاک بسٹر پاکستانی فلم 'وار' کے کردار ہیں۔

'فوج کے ہاتھوں پٹنے والے قومی سلامتی کے لیے خطرہ ہیں' آئی ایس پی آر کا انکشاف

خبرستان ٹائمز: میجر جنرل عاصم باجوہ نے پارلیمان سے موٹروے پولیس پر پابندی عائد کرنے کے لیے قانون سازی کرنےاور تمام فوجی ڈرائیوروں، سابق فوجیوں، فوجی افسران کی بیگمات، ہمسایوں اور خانساماوں کے لیے چالان فری ڈرائیونگ لائسنس جاری کرنے کا مطالبہ کیا۔

جہاد بالبرینجلینا؛ آئی ایس آئی نے معروف اداکار جوڑے کی طلاق کیوں کروائی؟

خبرستان ٹائمز: معروف ہندوستانی صحافی ارناب گوسوامی نے اپنے ٹی وی پروگرام نیوز آور میں انکشاف کیا ہے کہ آئی ایس آئی نے اُڑی حملے سے توجہ ہٹانے کے لیے انجلینا جولی اور بریڈ پٹ کے مابین طلاق کرائی ہے۔