Posts From Asad Fatemi

Back to homepage
Asad Fatemi

Asad Fatemi

Asad Fatemi is a freelance writer and a poet. He is a former editor of Urdu section of Laaltain. He lives in his hometown in district Jhang.

اے موجۂ فرات کہیں جا کے ڈوب مر

قدیم ایزدی مذہب کے پیروکار کئی دن سے سوالِ بیعت پر مسلسل انکار کی وجہ سے بھوکے پیاسے محصور تھے۔ وہاں سے تازہ اطلاع ہے کہ ان کے سروں کی فصل کاٹے جانے کی خبریں آنا شروع ہو گئی ہیں۔
Read More

رنگوں میں کھیلتی، پتھرائی آنکھوں کی سرخ داستان

اورحان پاموک، کا ناول "سرخ میرا نام" ایک سنسنی خیز تاریخی کہانی ہونے کے ساتھ ساتھ، اواخر سولہویں صدی کے استنبول میں، عثمانی سلطان مراد سوم کے کتاب خانے میں کام کرنے والے منی ایچر فنکاروں کی زندگی، موت، سیاست اور فنی مباحثوں کی ایک عالمانہ دستاویز ہے۔
Read More

پاکستان: گستاخی اور جبر

توہین مذہب قوانین کے ذریعے جانوں کے ضیاع کے حوالے سے علی سیٹھی کا مضمونTyranny of blasphemy نیویارک ٹائمز کے بین الاقوامی ایڈیشن میں شائع ہوا تھا
Read More

دخترِ وزیر، دوہری تاریخی اہمیت کی ایک کہانی ـ کتاب تبصرہ

ہملٹن کا یہ ناول ایسے ان گنت قیمتی مشاہدات بیان کرتی ہوئی ایک ادبی دستاویز ہے۔
Read More

کائناتی گرد میں عریاں شام

اردو شاعری کے لیے یہ بات ایک نیک شگون ہے کہ شعراء کی نئی پود کافی حد تک غزل بمقابلہ نظم کے "موازنہ٫ انیس و دبیر" سے باہر آ گئی ہے اور نظم، اپنے نت نئے اسلوبیاتی تجربات کے ساتھ، غزل کی ساکھ کو متاثر کیے بغیر نئی تخلیقی آوازوں کے ہاں اپنے پورے قد کے ساتھ کھڑی ہے۔
Read More

ماما قدیر لاہور میں؛ نی سسیے جاگدی رہئیں

زندہ دلوں کے شہر لاہور میں داخل ہونے سے پہلے، چلتن کے ویرانوں سے چل کر آئے ماما قدیر کو اتنا اندازہ تو ہونا ہی چاہیے تھا کہ بڑے بڑے شہروں میں چھوٹی چھوٹی خبریں اتنی آسانی سے ذرائع پر بار نہیں پاتیں۔ ۔۔۔۔
Read More

فکرِ فیض اور نوجوان نسل

فیض جیسے نوابغ کے بعد کا خلا پر کرنے کے لیے صدیوں کا انتظار درکار ہے، اور فیض اپنی وفات کے ربع صدی بعد بھی بدستور ترقی پسندوں کے لیے حجت کا درجہ رکھتے ہیں۔ اور آج بھی ہم ترقی پسند ادب کے زمانۂ فیض سے ہی گزر رہے ہیں۔
Read More

اٹھاؤ پرچم تحقیق ہرچہ بادا باد۔۔۔روئیداد خودی مشاعرہ

اردو میں شعر کہنے کی روایت کو عالمی شعری سرمائے میں شاید سب سے عظیم قرار نہ دیا جا سکے، لیکن شعر سننے اور سراہنے کی مجلسی روایت، اور روزمرہ گفتگو یا رسمی تحریر و تقریر میں اشعار نقل کیے

Read More

مٹری کی کہانی

لوک کہانیاں کسی بھی تہذیب کی اپنی ثقافت، روزمرہ کے رہن سہن اور عام لوگوں کی خواہشوں، اندیشوں اور خیالوں کی ترجمان ہوتی ہیں۔ اب بھی بہت سے گھر کے بزرگ اپنے بچوں کو سونے سے پہلے اس طرح کی

Read More

قصور (بدلتے شہر)۔

شہر قصور کا ذکر بھی جی سے سننے والوں کے لیے ایسا سب رنگ اور دلآویز ہے کہ موضوع بدلنے کے لیے کسی بہت بڑے تمدنی نام کو بیچ میں لانے سے بات بدلتی ہے۔ ایک بھرپور تاریخ کے حامل اس شہر کی شناخت بننے والے مشاہیر کی فہرست کسی بھی دوسرے عظیم شہر سے کم نہیں ہے۔
Read More

سنتے ہیں کہ بہاراں ہے

فطرت کے قریب رہنے والے آدمی کی سرشت رہی ہے کہ وہ باہر کے موسم کی خوشگواری یا ناگواری سے سرخوشی یا غمی، سرمستی یا اداسی جیسے جذبے کشید کر کے اپنے اندر کے موسم کو بناتا بگاڑتا رہا ہے۔ موسموں میں بہار کا موسم معلوم تاریخ اور فنون میں اب تک خوشحالی، شادمانی، رقص و کیف، میل ملاپ اور پیداوار کا ایک سکہ بند استعارہ رہا ہے۔
Read More

بدلتے شہر:گوجرانوالہ

گوجرانوالہ ملک کا ساتواں بڑا شہر ہے اور ہر بڑے شہر کی طرح بدلتا رہا، اور بدل رہا ہے۔ تمدن کے 'دوری جدول' پر بدلتے
Read More

(بدلتے شہر:لائل پور (فیصل آباد

(اسد فاطمی) چناب اور راوی کے درمیان ساندل بار میں آباد شہر، فیصل آباد، جسے لایلپور بھی کہتے ہیں، اپنی تاریخ میں ایک صدی سے کچھ سال اوپر کی عمر اور تاریخ رکھتا ہے۔ تاریخ کے بسیط گھڑیال پر ایک

Read More

شوق برہنہ پا چلتا تھا

سید اسد فاطمی میں ابھی تک عمر کے اس حصے سے باہر نہیں آیا جب پیٹ میں آٹھ پہر بھوک کی جگہ خواہشیں بھڑکتی ہیں اور دسترخوانوں پر گرم کھاجوں کی بجائے خوابوں کی ہفت خواں سجا کر کھائی جاتی

Read More