Posts From Tauseef Ahmad

Back to homepage
Tauseef Ahmad

Tauseef Ahmad

Tauseef Ahmed is a marketing executive from Bahawalpur and regularly writes for Laaltain.

سلمان تاثیر کا آسیہ بی بی کے نام خط

آپ بری ہو گئیں، میری جانب سے مبارکباد قبول کیجیے۔ مگر انصاف ہونے میں ابھی دیر ہے۔ آپ جلد اپنے اہل خانہ سے ملاقات کریں گی ،اس سے بڑھ کر خوشی کا لمحہ کوئی نہیں ہو گالیکن سب ابھی تک

Read More

دو دسمبر ۔۔۔۔۔

توصیف احمد: میں رضا سے کبھی نہیں ملا بالکل اسی طرح جیسے میں اجتماعی قبروں، خفیہ حراستی مراکز اور نجی عقوبت خانوں کے سپرد کئے جانے والوں سے نہیں ملا۔۔۔میرے لئے 2 دسمبر رونے کا دن ہے، بلکہ ہم سب کے لئے دو دسمبر رونے کا دن ہے۔

Read More

ایک پاکستانی ہونے کی قرار داد

توصیف احمد:
ہم اقرار کرتے ہیں کہ ہم پاکستانی ہیں اور پاکستانی ہونے کے لیے ہم دنیا کے دیگر ممالک سے نفرت کرنے، ان کی سرحدوں کے اندر دراندازی کرنے اور انہیں اپنا دشمن خیال کرنے کے پابند نہیں۔
Read More

ہندوستانی ہمسائے کے نام امید کے ساتھ ایک خط

توصیف احمد: جب تک ہندوستان یا پاکستان میں کوئی ایک بھی شخص مشترکہ اجداد کے تہذیبی ورثے کا دعویدار ہے تب تک مجھ سے اور خود سے مایوس مت ہونا۔
Read More

امن کے عالمی دن پر ہندوستانی ہمسائے کے نام خط

توصیف احمد: ہم صرف اس لیے ایک دوسرے کے بچوں اور ماوں کو قتل کرنے اور ان پر بارود برسانے کو تیار ہیں کیوں کہ ہم ایک دوسرے کو جانتے نہیں اور ہمیں ایک دوسرے سے نفرت کرنے کے سوام کوئی اختیار ہمارے ملکوں نے نہیں دیا
Read More

کیا سوشل میڈیا پاکستان کو تبدیل کر رہا ہے؟

توصیف احمد: تصور کیجیے کہ فوج جیسا طاقت ور ادارہ محض چند تصاویر اور ایک ویڈیو کے وائرل ہونے سے اس واقعے پر تحقیقات کا بیان دینے پر مجبور ہو گیا ہے۔
Read More

مجھے اپنی غداری پر فخر ہے

توصیف احمد: مجھے اپنی غداری پر فخر ہے کیوں کہ میری غداری نے ملک نہیں توڑا تھا، ملک آپ کی حب الوطنی نے توڑا ہے۔
Read More

پی ٹی وی پر حملے سے اے آر وائی پر حملے تک

توصیف احمد: ایم کیو ایم کے اس اقدام کا دفاع ممکن نہیں مگر عسکری اداروں کا دفاع بھی ممکن نہیں، لیکن ایم کیو ایم کم سے کم اپنے کیے پر شرمندہ تو ہے، خاکی وردی والے اور ان کے چہیتے سیاستدان تو آج تک پنی غلطیوں کو تسلیم کرنے کو تیار نہیں
Read More

شک تشدد کی بنیاد ہے؟

توصیف احمد: کیا ہم انسانوں کو محض انسان نہیں سمجھ سکتے اور کیا ہم ان سے نفرت یا محبت کرنے، ان کے بارے میں فیصلہ کرنے یا ان کو قتل کرنے کے لیے مشتعل ہونے سے پہلے انہیں جاننے کی زحمت کر سکتے ہیں؟
Read More

ہمارے ضمیر پر دستک دینے والے

کبھی کبھی میں سوچتا ہوں کہ یہ ماما قدیر اوراروم شرمیلا جیسے لوگ جو لانگ مارچ کرتے ہیں، یا بھوک پڑتالیں کرتے ہیں کیا انہیں علم نہیں ہوتا کہ ہمارے جیسے ملکوں میں کبھی بھی کوئی بھی ان کی بات نہیں سنے گا
Read More

پرامن کشمیریوں کی حمایت کیجیے، برہان وانی کی نہیں

اس سب کے باوجود کہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بدترین خلاف ورزیاں ہو رہی ہیں اور بلوچستان میں ریاستی جبر ناقابل برداشت ہو چکا ہے میں ہتھیار اٹھانے والون کی حمایت نہیں کر سکتا۔
Read More

عمران خان صاحب!میں مٹھائی نہیں بانٹوں گا

آپ کو اس نظام پر اعتماد نہیں جس کے باعث آپ کی جماعت کو خیبرپختونخوا کی حکومت ملی۔ جس نظام کے تحت آپ کو قومی اسمبلی اور پنجاب کی صوبائی اسمبلی میں حزب اختلاف میں شمولیت کا موقع ملا
Read More

امام کعبہ ہمارے پاوں کب چومیں گے

کیا کبھی امام کعبہ بھی اپنے خطبہ حج میں ابن رشد کے ساتھ کیے گئے سلوک پر اسی طرح معافی مانگیں گے جس طرح پوپ اور چرچ نے ماضی میں گلیلیو اور دیگر سائنس دانوں کے خلاف روا رکھے جانے والے سلوک پر مانگی تھی؟
Read More

ہندوستانی ہمسائے کے نام اظہار یکجہتی کے لیے لکھا گیا خط

میرا اور تمہارا مسئلہ ایک ہے، مقصد ایک ہے، ہم دونوں کو اپنے اپنے وطن سے نہیں اپنے اپنے وطن میں رہنے کی آزادی چاہیئے، اس آزادی کے لیے میرا اور تمہار نعرہ ایک ہے
Read More

تعلیمی اداروں کی غیرت بریگیڈ

اساتذہ کا یہ رویہ صرف سرکاری سطح پر قائم مخلوط تعلیمی اداروں تک محدود نہیں، ہم نے تو بوائز سکول میں بھی اساتذہ کو لڑکوں کے "پف" کاٹتے دیکھا ہے اور گرلز سکول میں رنگین جرابوں یا مہندی لگے ہاتھوں پر جرمانے سنے ہیں۔
Read More