دُھنیا

میری ماں تو بس ایک دُھنیا تھی جو

تربیت کے بہانے
مجھے رات دن یوں دُھنے جا رہی تھی
کہ رشتوں کے چرخے پہ چڑھنے سے پہلے
Read More

Dissolving Dawns (Journey from 1947)

We all started this

A journey that begins

For dawn

A hope that was going to be born

Read More

ہم جماعت سے

کہ تیری خوش گمانی پر
کبھی پورا نہیں اُترا
Read More