کٹی کلائی اور اندھیرا کمرا

کٹی کلائی اور اندھیرا کمرا

اندھیرے کمروں کے ککون میں فون کی گھنٹی بجتی رہے گی
تیرے لہو کی آشوبی بارش کو شیشے توڑنا ہوں گے
اس بارش میں جھلسی دھند کو پہروں چیختے رہنا ہو گا
مارگلہ کا سبز سکوت ہر رات مرے بستر پر اگے گا
روڈ پار بندروں کو ہمیشہ چھلیاں چوری کرنا ہوں گی
تیری ہنسی کو گونجنا ہو گا!
اندھیرے کمروں کے ککون میں
سانس گھٹا بیمار ذہن ہر نبود کو چاٹے گا
اور مرے پپڑی سے اٹے لفظوں کو سرخی لیپنا ہو گی
تیرے بچپن کی اک شیطانی کے داغ کو چومتے رہنا ہو گا
اندھیرے کمروں کے ککون میں
Image: Sea of Depression by Alexander Almark

Did you enjoy reading this article?
Subscribe to our free weekly E-Magazine which includes best articles of the week published on Laaltain and comes out every Monday.
Razi Haider

Razi Haider

Razi Haider is an engineer by profession , Kashmiri by heart , a poet and photographer. His Interests include politics, ontology, ethical philosophy, theology film and photography history.


Related Articles

وندنا (التماس-مناجات)-روی شنکر

ستیہ پال آنند: تِن مِن، تِن مِن، تِن مِن، تِن مِن
سانوریا تو روٹھ گئے ہیں، بولت ناہیں
روٹھ گئے ہیں سانوریا تو، بولت ناہیں

خواب کے دروازے پر

نصیر احمد ناصر: میں تمہیں
خواب کے دروازے پر
اسی طرح جاگتا ہوا ملوں گا

حطؔاب کہو، اب کیا بیچو گے؟

نصیر احمد ناصر: حطاب کہو !
بے کاری کے دن کیسے کاٹو گے؟
کن پیڑوں پر وار کرو گے؟