ورثہ (ثروت زہرا)

ورثہ (ثروت زہرا)

[/vc_column_text][/vc_column][/vc_row]

 

Heritage

Life was bequeathed a love of mirrors
And mirrors hold her love's reflections.

Life will ever gaze at reflections,
Will ever kiss Love's frozen shapes.

Smash the mirrors to touch Love's warmth!
But Life was bequeathed a love of mirrors.

Translation: Dr. Rizwan Ali

ورثہ

 

زندگی کو آئینوں سے محبت 
ورثے میں ملی ہے 
اور آئینے میں اس کی محبوب کا عکس 
منجمد کردیا گیا ہے 
زندگی عکس کو دیکھ سکے گی 
عکس کے منجمد زاویوں پر 
اپنے ہونٹ رکھ سکے گی 
مگراپنے محبوب کی حرارتوں کو 
چھونے کے لئے ،
اسے آئینے کو توڑنا پڑے گا 
لیکن زندگی کو تو 
آئینوں سے محبت ورثے میں ملی ہے

Image: christian schloe

Did you enjoy reading this article?
Subscribe to our free weekly E-Magazine which includes best articles of the week published on Laaltain and comes out every Monday.

Related Articles

خبر بھی گرم فقط ہے تو سنسنی کے لیے

بس ایک وقت میسر ہے آدمی کے لیے
کہاں پہنچ میں ہے خوراک زندگی کے لیے

میں اُسے خشک کپڑے پہننے سے پہلے ملوں

زاہد امروز ہوا روح کے آسماں پر تنے سرخ سیبوں کے پودے ہلاتی ہے سیبوں کا جوڑا مجھے دیکھ کر

انٹیروگیشن ...!!!

ثروت زہرا: تم نے سورج سے کیوں روشنی چوری کی
تم پر دن لوٹنے کی دفعہ لگتی ہے
تم کو اب وقت کی ہتھکڑی لگتی ہے