Slide background

  مجلس احرار سے مولوی عبدالعزیز تک  

  ناصر شبیر  

Slide background

  Ahmed Rashid on Politics of Turmoil in the Muslim World  

   by Syed Muzammil Shah  

Slide background

  فاصلہ نہ رکھیں، پیار ہونے دیں  

عبد ل مجید عابد

Slide background

  درخواست بنام سالار اعظم برائے حصول سند وفاداری و حب الوطنی  

  عدیل اورنگزیب  

Slide background

    مزارعے   

  نعمان اسحاق  

Slide background

  بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی شدت پسندی کو فروغ دے رہی ہے  

Politics & Current Affairs

View all posts

Education

View all posts

International

View all posts

Ahmed Rashid on Politics of Turmoil in the Muslim World

Ahmed Rashid, a renowned journalist and author of bestselling “Taliban: Militant Islam, Oil and Fundamentalism” spoke on the rise of ISIS, Yemen Crisis and their impact on Pakistan in a talk hosted by The Last Word.

مہربان، قدردان۔۔۔ اور تماشہ ختم

چوراہوں پہ اکثر ایسےمداری تماشہ کرتے نظر آتے ہیں جو تماش بینوں کا تانتا بدھتے ہی فوراً اپنا تماشہ لپیٹنا شروع کر دیتے ہیں۔

In the Country of Men- Book Review

In the Country of Men is the debut novel of a Libyan novelist Hisham Matar published in 2006 and short-listed

Society

View all posts

History

View all posts

The Politics of Sectarian Division of Islam

From Shia-Sunni senseless killings in Pakistan and elsewhere to the increasing void across the divide, many Shias and Sunnis believe in all sincerely-misguided belief that doing so are meant to please Allah.

مجلس احرار سے مولوی عبدالعزیز تک

آخر کیا وجہ ہے کہ پاکستان میں سیاست دانوں کے عوامی بیانات و تقاریر پر بہت زیادہ حساسیت پائی جاتی ہے ؟ان کے ایک ایک لفظ کو حب الوطنی کی چھلنی میں سے انتہائی باریک بینی سے گزارا جاتا ہے جب کہ دوسری طر ف نام نہاد دین فروشوں کے بدترین اور متنازعہ ترین بیانات بھی عوامی احتجاج کو اکسانے میں ناکام رہتے ہیں۔

بھٹو کی پھانسی اور ہمارا ادب

4 اپریل 1979 ہمارے سماج میں جہاں سیاست کے اندر ایک مستقل تلخی گھولے جانے کا عکاس ہے وہیں یہ دن ہمارے ادب کو نئی جہت ملنے کی عکاسی بھی کرتا ہے۔ میں جب اس حوالے سے اپنی یادوں کو کھنگالتا ہوں تو مجھے یاد آتا ہے کہ ڈاکٹر فیروز صاحب نے ایک مضمون اس وقت کے معروف جریدے پاکستان فورم میں لکھا تھا اور اس کا عنوان تھا ‘بھٹو فیلیا، لوگ بھٹو سے محبت کیوں کرتے ہیں’۔ یہ مضمون اگرچہ سیاسی غرض سے لکھا گیا تھا مگراس میں ادبی چاشنی موجود تھی۔

یوم پاکستان اور نصابی کتب

ریاستی سطح پر نصابی کتب کی تیاری کے دوران ریاستی نظریات کی تبلیغ کے لیے متعدد طریقے استعمال کیے جاتے ہیں۔